Advertisements
Free Business Listing
We are imprisoned in India but are not part of it. Sikh community 404

ہم بھارت میں قید ضرور ہیں لیکن اس کا حصہ ہرگز نہیں ہیں۔

  نئی دہلی۔

بھارت کے یوم آزادی کے موقع  بھارت میں  سکھ برادری نے یوم سیاہ منایا  اور کشمیریوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کی ۔

ایک ٹی وی پروگرام سے بات کرتے ہوئے خالصتان تحریک کے بانی رہنما ڈاکٹر امرجیت سنگھ نے کہا کے ہم بھارت میں قید ضرور ہیں لیکن بھارت کا حصہ ہرگز نہیں ہیں بھارت نے ہمیشہ سکھ برادری سے ناروا سلوک رکھا ہم زبردستی بھارت کا حصہ بنایا گیا ہم بھارت کا حصہ نہیں ہیں ۔

بھارت نے پارلیمنٹ میں آئینی غندہ گردی کی اور ہماری مقدس جگہ دربار صاحب میں ہزاروں سکھوں کو مارا ، دریائے جمنا سے واہگہ تک خالصتان ڈکلیر کروائیں گے ۔

امر جیت سنگھ کا مزید کہنا تھا کے سکھ قوم نے  بھارتی آئین کو کبھی نہیں  ماناڈیڑھ لاکھ سکھوں کو پنجاب کے جھوٹے مقابلوں میں مارا گیا ہم مقبوضہ پنجاب کو خالصتان ڈکلیر کرانا چاہتے ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کے امریکہ میں احتجاج کے دوران خالصتان کا جھنڈا لہرائیں گے ۔بھارت میں کشمیری طلبا بھی ڈرے ہوئے ہیں برصغیر میں تیزی سے حالات بدل رہے ہیں ۔

گذشتہ سال ہم نے نیو یارک میں ورلڈ سکھ پارلیمنٹ لانچ کی ، ورلڈ سکھ پارلیمنٹ 30 ملین سکھوں کی آواز بنے گی ہم اسے صرف سیاسی بیان بازی تک محدود نہیں کرنا چاہتے ۔

امرجیت سنگھ کا کہنا تھا کے برطانوی نشریاتی ادارے ڈاکومینٹری میں ہزاروں کشمیریوں کو نکلنے کو رپورٹ کیا 7 لاکھ فوج پہلے ہی کشمیر میں موجود ہے  اب بھارت کی انتہا پسند جماعت آر ایس ایس کے غنڈے بھی کشمیر میں بیج دئے گئے ۔

سکھ برادری بھارت کے یوم آزادی کو تسلیم نہیں کرتی ہمیں زبردستی بھارت کا حصہ بنایا جا رہا ہے ہم کشمیریوں کے حق آزادی کو تسلیم کرتے ہیں اور ان پہ ہونے والے ظلم کی بھی بھرپور مذمت کرتے ہیں ۔

دریائے جمنا سے واہگہ تک خالصتان ڈکلیر کروائیں گے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں