Advertisements
We should not forget Kashmir: President Jwahir Lal Nehru University Students Union 151

ہمیں کشمیرکو نہیں بھولنا چاہیے ، صدرجواہر لال نہرو یونیورسٹی سٹوڈنٹس یونین

نئی دلی 16جنوری ( جموں کشمیر نیوز ٹاکس )

جواہر لال نہرو یونیورسٹی سٹوڈنٹس یونین کی صدر عاشی گھوش نے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کی منسوخی اور اسے دو یونین علاقوں میں تقسیم کرنے کے مودی حکومت کے اقدام کی شدیدمذمت کی ہے۔

تفصیلات  کے مطابق خطاب کے دوران عاشی گھوش نے جامعہ ملیہ میں جاری احتجاج میں شرکت کی اور مظاہرین سے خطاب کیا۔ انہوں نے اس موقع پر کہاکہ ہمیں اپنی جدوجہد میں کشمیر کو نہیں بھولنا چاہیے ۔ انہوں نے کہاکہ کشمیریوں کے ساتھ جو کچھ بھی ہو رہا ہے وہ ہم سے آئین کے تحت حاصل آزادیوں کو چھیننے کی حکومت کی سازش کا حصہ ہے ۔

یاد رہے کہ جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے سابق صدور اور موجودہ سٹوڈنٹس رہنماوں نے کشمیر کی خصوصی حیثیت پر شب خون مارنے پر مودی حکومت کے اس اقدام کی نہ صرف بھر پور مخالفت کی ہے بلکہ  5 اگست سے لے کر اب تک ہندوستان کے کونے کونے میں کشمیر کے حق میں اٹھنے والی آواز میں بنیادی اور کلیدی کردار جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے ملک کے طول و عرض میں پھیلے ہوئے طلباء کا ہے جنھوں خالصتا انسانی بنیادوں  پر کشمیریوں کی آذادی کی آواز کو بلند کیا اور یہ طرہ بھی اسی جامعہ کے طلباء کو ہی جاتا ہے جنھوں  ہندوستان میں ملسلمانوں کے خلاف بنائے جانے والے شہریت بل کو اور اس بل کی پشت پناہ مودی سرکار کو ہر فورم پر ننگا کیا اور اب وقت آن پہنچا ہے کہ یہ بل مودی حکومت کے گلے کی ہڈی  بنا ہوا ہے۔

  ریاست جموں کشمیر کا مسئلہ سیاسی اور انسانی مسئلہ ہے  اور کا حل بھی سیاسی اور انسانی ہی ہو گا ہندوستان کی طرح پاکستان کے پڑھے لکھے اور باشعور طلباء کو اپنے مخصوص خول سے باہر نکل کر پاکستان سرکار کو مجبور کرنا چاہے کہ وہ مسئلہ کشمیر کو کشمیری عوام کی خواہشات کے مطابق حل کریں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں