Advertisements
مقبوضہ کشمیر : بھارتی فوجیوں نے جموں میں تین کشمیری نوجوان شہید کر دیے۔ 128

کنزرویٹو پارٹی آف برطانیہ کا نریندر مودی پر بھارتی مقبوضہ کشمیر میں کرفیو ختم کرنے پر زور

لندن 07 فروری ( جموں کشمیر نیوز ٹاکس)

 برطانوی پارلیمنٹ میں کنزرویٹو پارٹی کی اکثریت نے بھارتی وزیر اعظم نریندرا مودی سے مقبوضہ کشمیر میں نہتے کشمیریوں پر مظالم بند،لاک ڈاون ختم اور محصورین کو انکا حق خودارادیت دینے کا مطالبہ کیا ہے ۔

تفصیلات  کے مطابق یہ لندن میں یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر تحریک کشمیر برطانیہ کے زیر اہتمام برطانوی پارلیمنٹ میں منعقدہ کشمیر کانفرنس کے دوران کیاگیا ۔ کانفرنس کے مہمان خصوصی صدر آزاد جموں و کشمیر سردار مسعود خان اورجموں و کشمیر سالویشن موومنٹ کے نائب چیئرمین الطاف احمد بٹ تھے۔ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سردار مسعود احمد خان نے کہا کہ پاکستان اور کشمیری عوام مسئلہ کشمیر کا پرامن اور دیر پا حل عالمی معائدوں اور بھارتی وعدوں پر عمل درآمد چاہتے ہیں۔ بھارت کا طرز عمل خطے کے امن کےلئے شدید خطرہ ہے ۔عالمی برادری کی اجتماحی ذمہ داری ہے کہ وہ مداخلت کرے۔

انہوں نے کہاکہ برطانیہ اقوام متحدہ کی سکیورٹی کونسل کا مستقل رکن ہونے کی حیثیت سے مسئلہ کشمیر کے پر امن حل کیلئے اپنا موثر کردار ادا کرسکتا ہے ۔انہوں نے کہاکہ پانچ اگست کے یکطرفہ اقدامات کے بعد سے گذشتہ چھ ماہ کے دوران بھارت نے مقبوضہ علاقے میں جو حالات پیدا کر رکھے ہیں وہ افسوسناک ہیں اور عالمی امن کا تقاضا ہے کہ مسئلہ کشمیر کے حل پر توجہ دی جائے۔انہوں نے جموں و کشمیر سالویشن موومنٹ کے نائب چیئرمین الطاف احمد بٹ، تحریک کشمیر برطانیہ کے صدر راجہ فہیم کیانی کی کوششوں کو خراج تحسین پیش کیا۔

اس موقع پر الطاف احمد بٹ نے کہا کہ بھارت نے گذشتہ چھ ماہ سے کشمیر کو فوجی محاصرہ اور لاک ڈاون کر کے کشمیر ی معیشت کو شدید نقصان پہنچایا ہے ۔سکول، کالج، یونیورسٹیاں اور ہسپتال بند ہیں جبکہ حریت چیئرمین سید علی گیلانی گذشتہ دس سال سے گھر میں نظربند اور دیگر حریت رہنماءشبیر احمد شاہ، یاسین ملک،آسیہ اندرابی، ڈاکٹر فیاض، اورظفراکبر بٹ جیلوں میں نظربندہیں۔ انہوںنے کہاکہ نریندر مودی اوربھارتی آرمی چیف نے مقبوضہ کشمیر اور لائن آف کنٹرول پر جنگ کاماحول قائم کر رکھا ہے اور دونوں ہمسایہ جوہری طاقتوں کے درمیان کشیدگی نہ صرف جنوبی ایشیا بلکہ پوری دنیاکے امن کیلئے سنگین خطرہ ہے ۔انہوں نے مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ کی قراردادوںاور کشمیری عوام کی امنگوں کے مطابق حل کرنے پر زوردیا۔تحریک کشمیر یورپ کے صدر محمد غالب نے کہا کہ بڑی تعداد میں برطانوی ارکان پالیمنٹ کی کانفرس میں شرکت نریندر مودی کے لیے واضح پیغام ہے کہ کشمیری عوام آزادی کی جد و جہد میں تنہا نہیں۔ راجہ فہیم کیانی نے کانفرنس کے انعقاد میں تعاون پر رکن پارلیمنٹ پال برسٹو کا شکریہ ادا کیا۔

کانفرنس میں آ ل پارٹیز کشمیر گروپ کی چیئر پرسن اوررکن پارلیمنٹ ڈیبی ابرایم، دیگر ارکان پارلیمنٹ سٹیو بیکر، مارکو لونگی، افضل خان، یاسمین قریشی ، لارڈ قربان، والری واز،مس فلیپس،ایم خالد مرزا ، ڈاٹر آف کشمیر کی چیئر پرسن زبیدہ خان اور بڑی تعداد میںرکن پارلیمنٹ ،کونسلرز اور کمیونٹی رہنماﺅںنے شرکت کی ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں