Advertisements
Several Indonesian Unmarried Couples Detained for Banning Valentine's day   63

ویلنٹائن ڈے بنانے پر پابندی، انڈونیشیاء میں کئی غیر شادی شدہ جوڑے گرفتار۔

جکارتہ  (14 فروری) میں پولیس نے ویلنٹائن ڈے کے موقع پر غیر اخلاقی حرکات کرنے والے عناصر کے خلاف کریک ڈاون کیا۔

تفصیلات کے مطابق اسلامی شریعت کے اصولوں کے برخلاف یہودیت کے پھیلائے گئے گند کو بڑھاوا دینے والا غیر اخلاقی دن ویلنٹائن ڈے بنانے پر انڈونیشیاء میں پابندی عائد کی گئی تھی جس کی خلاف ورزی کرنے والے متعدد جوڑوں کے خلاف کریک ڈاون کرتے ہوئے انہیں گرفتار کر لیا گیا۔ 

خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق انڈونیشاء کے پولیس اہلکاران اور افسران نے 14 فروری کے روز مختلف ہوٹلوں کے کمروں میں چھاپے مار کر غیر شادی شدہ جوڑے گرفتار کر لئے، ذرائع کے مطابق انڈونیشاء میں لوگوں کو خبردار کیا گیا تھا کہ محبت کے نام پر  کی جانے والی بے ہودگی سے باز رہیں ورنہ کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔

Several Indonesian Unmarried Couples Detained for Banning Valentine's day  
Several Indonesian Unmarried Couples Detained for Banning Valentine’s day

انڈونیشاء کے شہر مکاسر ، ڈیپوک ، صوبہ بانڈااچے اور دیگر شہروں میں  واقع ہوٹل مالکان کو خبردار کیا گیا تھا کہ 14 فروری کو محبت کے نام پر کی جانے والی بے غیرتی کے فروغ سے باز رہیں ۔

مسلم اکثریتی آبادی والے ملک  انڈونیشاء میں گزشتہ روز جمعے کے دن گیارہ فروری کو محبت کے عالمی دن کے موقع پر شادی سے پہلے جسمانی تعلقات قائم کرنے والے جوڑوں کے خلاف کریک ڈاون کیا گیا، کریک ڈاون کے دوران گرفتار ہونے والوں میں ایک جرمن شہری بھی شامل ہے جو اپنے انڈونیشنین ساتھی کے ساتھ گرفتار ہوا جو کہ میاں بیوی نہیں تھے۔ انڈونیشیاء کے شہر مکاسر میں پولیس نے مختلف ہوٹلوں پر چھاپوں کے دوران دو درجن سے زائد غیر شادی شدہ جوڑوں کو گرفتار کیا۔

یاد رہے  کہ گزشتہ روز 14 فروری کو انڈونیشاء میں ہونے والا کریک ڈاون گزشتہ برس حکومت کی جانب سے پاس کئے جانے والے بل کے تحت ہوا جس کے مطابق شادی سے پہلے جسمانی تعلقات رکھنا غیر قانونی قرار دیا گیا ہے۔ 

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں