Advertisements
Saudi govt announce Curfew in all over the Saudi Arabia no one can move from one City to another. 334

سعودی حکومت کا 26 مارچ سہ پہر تین بجے سے ملک میں کرفیو لگانے کا اعلان| تمام شہروں کے داخلی خارجی راستے بند۔

ریاض (جے کے نیوز ٹاکس) سعودی حکمران شاہ سلمان بن عبدالعزیر نے سعودی عرب میں کرونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیش نظر ملک بھر میں کرفیو لگانے کے نئے شاہی احکامات کی منظوری دی ہے۔ سعودی پریس ایجنسی۔

تفصیلات کے مطابق سعودی عرب کے تینوں ریجنز یعنی ریاض ، مکہ اور مدینہ میں کرفیو کے نئے شاہی احکامات جاری کر دئے گئے ہیں جن کے مطابق ان تینوں ریجنز میں  رہنے والا کوئی بھی شخص کسی دوسرے ریجن  میں نہیں جا سکتا اور کسی بھی شہر میں رہنے والا کوئی شخص نہ شہر سے نکل سکتا ہے اور نہ ہی کسی دوسرے شہر میں داخل ہو سکتا ہے۔

سعودی حکام کا کہنا ہے کہ یہ فیصلہ عوام کی بہتری اور کرونا وائرس کو کنٹرول کرنے کے لئے لیا گیا ہے۔  حکام کے مطابق کرفیو میں صرف انہی لوگوں کو استثنی ہو گا جنہیں لاک ڈاون میں  شاہ سلمان کی طرف سے استثنی حاصل تھا لیکن اس مرتبہ ان لوگوں کو بھی استثنی کسی ایمرجنسی کی صورت میں ہوگا ورنہ کسی کو بھی کسی شہر میں داخلے کی اجازت نہ ہو گی۔

یاد رہے سعودی عرب گلف ممالک میں سب سے ذیادہ کرونا سے متاثر ہوا ہے جہاں اب تک کے اعدادو شمار کے مطابق  500 زائد افراد کے اندر کرونا وائرس پوزیٹو دیکھا گیا ہے جبکہ 19 لوگ اس وقت تک لقمہ اجل بن چکے ہیں۔ سعودی حکومت کی جانب سے جاری کئے گئے نئے اقدامات کا مقصد کرونا کی روک تھام کرنا ہے تاکہ لوگ گھروں میں رہ کر اس وباء سے بچ سکیں۔ 

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں