Advertisements
96

حکومت آزاد کشمیر چھوٹے کاروباری ، روزانہ اجرت پر کام کرنے والوں کو فوری ریلیف فراہم کرے : چوہدری یاسین ۔

مظفر آباد (جے کے نیوز ٹاکس  )

آزادجموں وکشمیر قانون ساز اسمبلی میں قائد حزب اختلاف چوہدری محمد یاسین نے مطالبہ کیا ہے کہ حکومت آزادکشمیر فوری طورپر چھوٹے کاروباری،روزانہ اجرت پر کام کرنے والوں کو فوری طورپر ریلیف فراہم کرے،یہ مشکل وقت ہے،لاک ڈاؤن کی وجہ سے غریب آدمی کی مشکلات میں مزید اضافہ ہوا ہے۔

لاک ڈاؤن کی اہمیت سے انکار نہیں کیا جاسکتا لیکن ایس او پیز پر سختی سے عملدرآمد کرواتے ہوئے کاروبار کی اجازت دی جائے۔وہ گزشتہ روز مرکزی انجمن تاجران کی اپیل پر اظہار خیال کررہے تھے۔انہوں نے کہا کہ چھوٹے تاجر آزادکشمیر کی معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتے ہیں۔لیڈر آف دی اپوزیشن چوہدری محمد یاسین نے کہا کہ 6اب روپے لیپس ہونے جارہے ہیں،حکومت اس مالی سال میں یہ رقم خرچ کرنے کی پوزیشن میں نہیں اس لیے وزراء اور ممبران اسمبلی کو سیاسی رشوت دینے کے بجائے چھوٹے کاروباری اور ٹرانسپورٹرز کو فوری امدادی پیکیج فراہم کرے،اپوزیشن اس معاملے میں حکومت کے ساتھ کھڑی ہوگی۔

چوہدری یاسین نے مزید کہا کہ پیپلزپارٹی آئندہ بجٹ میں مطالبہ کرے گی کہ ٹرانسپورٹرز اور تاجروں کا لاک ڈاؤن کے دوران ہونے والا نقصان پورا کرے کیونکہ ان لوگوں کے ساتھ لاکھوں لوگوں کا روزگار وابستہ ہے۔پہلے لاک ڈاؤن سے متاثر ہونے والوں کی مشکلات کا ازالہ کیا جائے ایک جانب لاک ڈاؤن اور دوسری جانب متاثرین کے لیے کوئی ریلیف نہیں یہ ناقابل قبول ہے۔پیپلزپارٹی پسے ہوئے طبقات کی آواز ہے جائز مطالبات میں ہم تاجر برادری کے ساتھ ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں