Advertisements
شبیر شاہ کی اہلیہ کی طرف سے سینئر حریت رہنماءکی صحت کے بارے میں اظہار تشویش۔ 113

شبیر شاہ کی اہلیہ کی طرف سے سینئر حریت رہنماءکی صحت کے بارے میں اظہار تشویش۔

سرینگر جے کے نیوز ٹاکس ۔ 
 مقبوضہ کشمیر میں کل جماعتی حریت کانفرنس کے غیر قانونی طور پرنظربند سینئر رہنما اور ڈیموکریٹک فریڈم پارٹی کے چیئرمین شبیر احمد شاہ کی اہلیہ نے بھارتی جیلوں میں کورونا وائرس کی بدترین صورتحال کے دوران اپنے شوہر کی صحت کے بارے میں شدید تشویش ظاہر کی ہے جو پہلے ہی متعدد امراض میں مبتلا ہیں ۔

 شبیر شاہ کی اہلیہ ڈاکٹر بلقیس شاہ نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں کہا ہے کہ انہیں نئی دلی کی تہاڑ جیل سے شبیر شاہ کا ایک ٹیلی فون موصول ہوا ہے جس میں انہوںنے بتایا کہ وہ مدافعتی نظام کمزور ہونے کی وجہ سے شدید بیمار ہیں۔

انہوں نے کہا کہ شبیر شاہ گزشتہ ساڑھے تین برس سے دلی کی تہاڑ جیل میں نظربند ہیں اور انہیں مناسب خوراک اور علاج معالجے کی مناسب سہولت سے بھی محروم رکھا جارہا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ جب کورونا وائر س کی وبا نے پوری دنیا کو پانی لپیٹ میں لے لیا ہے اور دنیا بھر میں صحت کا نظام مفلوج ہوچکا ہے تو اس پریشان کن صورتحال سے نمٹنا تہاڑ جیل کے صحت مرکز کے بس کی بات نہیں ہے ۔

ڈاکٹر بلقیس نے افسوس ظاہر کیاکہ شبیر شاہ علیل ہیں اورکورونا وائرس کی وجہ سے ان کی دیکھ بھال کرنے کیلئے بھی کوئی موجود نہیں ہے ۔انہوںنے کہاکہ وبا کی وجہ سے دنیا بھر میں نظربندوں کو جیلوں سے رہا کیا جارہا ہے اور دو مرتبہ تہاڑ جیل سے بھی تین تین ہزارسنگین جرائم میں ملوث مجرموں کو پے رول رہا کیاگیا ہے ۔ تاہم انہوںنے سوال کیاکہ جیل میں نظربند کشمیریوںکو کیوں رہا نہیں کیا جارہا ہے جن کے خلا ف مقدمات ابھی زیر سماعت ہیں۔ انہوں نے قابض انتظامیہ پر زوردیا کہ اگر شبیر شاہ اور دیگر کشمیری قیدیوں کو رہا نہیں کیا جاسکتا تو انہیں وادی کشمیر کی جیل منتقل کیا جائے ۔انہوںنے خبردار کیاکہ اگر جیل میں شبیرشاہ کے ساتھ کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش آیا تو یہ ان کا بے رحمانہ قتل ہو گا۔ 

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں